تمام سروے کانگریس کے حق میں: اتم کمارریڈی

صدر پردیش کانگریس این اتم کمارریڈی نے الزام عائد کیاکہ کارگذارچیف منسٹر کے چندر شیکھررائو ‘علاقائی جذبات کو ابھارتے ہوئے عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ عوامی محاذ(پرجاکوٹمی ) کومسلسل تنقید کا نشانہ بنانے کی مذمت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پرجاکوٹمی پر تنقید کرنا ‘ کے سی آر کا شیوہ بن گیاہے ۔ حلقہ اسمبلی حضورنگر کے مٹاپلی میں شری لکشما نرسمہا سوامی مندر میں پوجا کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے این اتم کمارریڈی نے کہاکہ تمام سروے میں کانگریس کی کامیابی کواجاگر کیاگیا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ کے سی آر نے صرف ساڑھے چار سال تک حکومت کی ہے انہیں صرف اپنی کامیابیوں کوہی اجاگر کرنا چاہے ۔ کے سی آر کواپنے انتخابی وعدوں اور وعدوں کی تکمیل وکارکردگی کی بیالینس شیٹ پیش کرنی چاہے تب معلوم ہوگا کہ ان ساڑھے چار برسوں کے دوران ٹی آرایس نے کیاکیاہے ۔ حقیقت یہ ہے کہ ٹی آرایس حکومت کی کارکردگی صفر ہے ۔ کے چندر شیکھررائو ‘ اپنی حکومت کی ناکامیوں سے عوام کی توجہ منتشر کرنے کے لئے اپوزیشن جماعتوں پر بیجا اور غیر ضروری تنقید کواپنا مقصد بناچکے ہیں۔ اتم کمارریڈی نے کہاکہ پرجاکوٹمی کی تشکیل کے بعد کے سی آر کی راتوں کی نیند اور دن کا چین ختم ہوگیاہے ۔ انتخابات میں ٹی آرایس کی امکانی شکست سے وہ خوفزدہ ہوچکے ہیں۔ بوکھلاہٹ کے نتیجہ میں کے سی آر ‘اپوزیشن بالخصوص کانگریس اور تلگودیشم پارٹی پرتنقید کرر ہے ہیں ۔کے سی آر آندھراپردیش کے چیف منسٹر این چندرابابونائیڈوکوغیر ضروری تنقید کانشانہ بنارہے ہیں جولائق مذمت ہے ۔ انہوںنے کہاکہ کے سی آر کوپہلے یہ بتانا چاہئے کہ ہرگھر کے ایک فرد کو سرکاری ملازمت دینے میں آیا نائیڈورکاوٹ بنے تھے ‘ آیا مسلمانوں کو 12فیصد تحفظات کی فراہمی ‘ مستحق دلتوں میں فی کس3ایکر اراضی کی تقسیم کوچندرابابونائیڈونے روکاتھا؟۔ انہوں نے کہاکہ ٹی آرایس قائدین کو تلنگانہ عوام کے کسی بھی طبقہ سے ووٹ مانگنے کا اخلاقی حق نہیں ہے ۔ریاست کے تمام 119 اسمبلی حلقوں کے عوام کواب احساس ہونے لگا ہے کہ کے سی آر کی حکومت نے ان کے ساتھ دغابازی کی ہے ۔ صدر پردیش کانگریس اتم کمارریڈی نے کہاکہ ریاست میں آئندہ حکومت ‘پرجاکوٹمی (پیپلزفرنٹ) کی بنے گی اور برسراقتدار آنے کے بعد پرجاکوٹمی ‘عوام کے تمام طبقات کی بہبود کیلئے کام کرے گی انہوںنے اس عزم کا اظہار کیاکہ وہ حضور نگر کو نہ صرف ریاست بلکہ ملک کا ایک مثالی حلقہ بنائیں گے ۔ بعدازاں اتم کمارریڈی نے حلقہ کے کئی مقامات پر روڈشوکیا۔

جواب چھوڑیں