ٹی آرایس دوبارہ برسر اقتدارآئے گی‘ اگزٹ پولس میں پیش قیاسی

تلنگانہ میں اسمبلی انتخابات کے پرامن انعقاد کے بعد مختلف چیانلس کی جانب سے اگزٹ پولس جاری کیئے گئے ہیں۔ انڈیا ٹوڈے ‘ سی ووٹرس سروے ‘ ٹائمزناو‘سی این ایکس ‘نیوز 18کی جانب سے سروے رپورٹس جاری کئے گئے ۔جملہ 119 اسمبلی حلقوں کے لئے منعقدہ انتخابات کے لئے ٹائمز ناوکی جانب سے جاری کردہ اگزٹ پول کے مطابق برسر اقتدار جماعت تلنگانہ راشٹراسمیتی دوبارہ حکومت بنائے گی ۔ ٹی آرایس کو 66 ‘ کانگریس کو37‘بی جے پی کو7 اور دیگر کو 14 حلقوں پرکامیابی حاصل ہونے کاامکان ظاہر کیا گیاہے ۔ نیوز18نے اپنے سروے رپورٹ میں ٹی آرایس کو50تا 65‘عظیم تر اتحاد کو 38تا52 ‘ بی جے پی کو 4تا7 اور دیگر کو 8تا14اسمبلی حلقوں پر کامیابی کی پیش قیاسی کی ہے ۔ انڈیا ٹوڈے نے اپنے اگزٹ پول میں ٹی آرایس کو79تا91 ‘عظیم تراتحاد کو 21تا33‘ بی جے پی کوایک تا 3 اور دیگر کو4تا7حلقوں پرکامیابی حاصل ہونے کا امکان ظاہر کیاہے جبکہ سی این ایکس نامی تنظیم کی جانب سے جاری کردہ سروے کے مطابق ٹی آرایس کو85‘ کانگریس کی زیر قیادت عظیم تراتحاد کو27‘بی جے پی کو2اور دیگر کو 5اسمبلی حلقوں پر کامیابی حاصل ہونے کی توقع ہے ۔ دوسری طرف آندھرا اکٹوپس کے نام سے مشہور سابق رکن پارلیمنٹ لگڑا پاٹی راجگوپال کے سروے رپورٹ کے مطابق ریاست میں کانگریس کی زیرقیادت مہاکوٹمی کو اقتدار حاصل ہوگا۔ اسمبلی انتخابات میں ٹی آر ایس کو35تا45‘ عظیم تراتحاد کو55تا75 ‘بی جے پی کو7اوردیگر کو10حلقوں پر کامیابی ملنے کی پیش قیاسی کی گئی ہے ۔ اسی طرح مشہور صحافی ارنب گوسوامی کا ریپبلک ٹی وی چیانل کے اگزٹ پولس کے مطابق ٹی آرایس کو65‘کانگریس کی زیر قیادت مہاکوٹمی کو41‘ بی جے پی کو5اور دیگر کو 10 حلقوں پر کامیابی ملے گی ۔ ان تمام اگزٹ پولس نتائج سے واضح ہورہاہے کہ ٹی آرایس انتخابات میں دوبارہ کامیابی حاصل کرتے ہوئے تاریخ رقم کرے گی اور کے چندر شیکھر رائو کی انتخابی حکمت عملی کامیاب رہے گی ۔تاہم انتخابات کا حقیقی منظرنامہ 11دسمبر کو رائے شماری کے بعدہی سامنے آئے گا۔

جواب چھوڑیں