وی وی پی اے ٹی سلیپس کی گنتی کامطالبہ: مہاکوٹمی امیدوار وی پرتاپ ریڈی

حلقہ گجویل کے مہاکوٹمی امیدوار وی پرتاپ ریڈی نے چیف الیکٹورل آفیسرڈاکٹر رجت کمار سے مطالبہ کیاکہ حلقہ کے تمام 306 پولنگ بوتھس کے وی وی پی اے ٹی سلیپس کی گنتی کے انتظامات کریں۔ ریڈی نے شبہ کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ ان کے حریف امیدوار وچیف منسٹرکے چندرشیکھررائو ‘الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں سے چھڑچھاڑ کرسکتے ہیںکیونکہ کے سی آر نے رائے دہی کے دن اپنے حاشہ بردارافراد کوبوتھس آنے والے رائے دہندوں کوروکنے کے لئے متعین کیاتھا۔ وی پرتاپ ریڈی نے رائے دہی کے اختتام کے 24 گھنٹوں کے بعدبھی حلقہ گجویل کے پولنگ تناسب کاعدم اعلان پر تشویش کااظہار کرتے ہوئے الیکشن کمیشن پر زوردیا کہ وہ اس بارے میں وضاحت کرے کہ آخرکیوں رائے دہی کے تناسب کااعلان نہیں کیاگیا۔ رائے دہی کے تناسب کے عدم اعلان کے پس پردہ اسباب وعلل کانکشاف کیا جانا چاہے ۔ جہاں تک مجھے معلوم ہے حلقہ گجویل میں تقریباً 80 فیصد رائے دہی ہوئی ہے ۔ چیف الیکٹورل آفیسر ڈاکٹر رجت کمار سے ملاقات کے بعد سکریٹریٹ میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کانگریس امیدوار وی پرتاپ ریڈی نے کہاکہ رائے دہی عمل کے مکمل ہونے کے 24گھنٹے بعد حلقہ میںہوئی رائے دہی کے تناسب کے عدم اعلان سے کئی شکوک وشبہات جنم لے رہے ہیں۔ انہوںنے اس سلسلہ میں کل ہائی کورٹ سے رجوع ہونے کی دھمکی دی اور کہاکہ الیکشن کمیشن اگر وی وی پی اے ٹی کے سلیپس کی گنتی کے مطالبہ کونظرانداز کرے گا تووہ سلسلہ وار بھوک ہڑتال منظم کریں گے ۔ ریڈی نے کہاکہ 24گھنٹوں بعد بھی رائے دہی کے تناسب کا عدم اعلان اس بات کا غماز ہے کہ گجویل حلقہ سے کے سی آر کی شکست اور میری (وی پرتاپ ریڈی) کی کامیابی طئے ہے ۔

جواب چھوڑیں