ایم بی ٹی قائد پر حملہ کی مبینہ کوشش‘ نوجوان زیرحراست

 ایم بی ٹی کے سابق کارپوریٹر امجد اللہ خان خالد پر آج رات 5 افراد نے جو کار میں سوار تھے، لکڑی کے پل کے قریب ان کے ساتھ گالی گلوج کی، ان پر حملہ کرنے اور ان کا فون کھینچنے کی کوشش کی۔ پولیس کے بموجب حملہ آوروں کی ٹولی میں موجود ایک نوجوان کو خالد نے پولیس کے حوالے کردیا۔ اس سلسلہ میں پولیس سیف آباد میں شکایت کی گئی اور ایف آئی آر درج کیا گیا۔ سب انسپکٹر سیدلی ریڈی نے یہ بات بتائی۔ امجد اللہ خان خالد کے بموجب وہ کار میں بنجارہ ہلز سے آرہے تھے۔ ان کی کار کا تعاقب کرتے ہوئے لکڑی کے پل کے قریب روکا گیا اور حملہ کی ناکام کوشش کی گئی جس پر انہوں نے اس ٹولی کے ایک فرد کو اپنی گرفت میں لے کر پولیس کے حوالے کردیا، وہ ہنوز حراست میں ہے۔ نوجوان کی شناخت نہیں کی جاسکی۔ حملہ آور اپنے ساتھیوں کو راجہ سنگھ کو فون کرنے کی ترغیب دے رہا تھا۔ خالد نے بتایا کہ دو دن قبل بھی ان کو نا معلوم دھمکی آمیز فون کالس، جان سے مار دینے کی دھمکی موصول ہورہے تھے۔ اس سلسلہ میں انہوں نے دبیر پورہ پولیس میں شکایت درج کروائی۔

جواب چھوڑیں