طبلہ‘ میرا بچپن کا ساتھی: استاد ذاکر حسین

 بین الاقوامی شہرت یافتہ کلاسیکی طبلہ نواز استاد ذاکر حسین کا کہنا ہے کہ طبلہ‘ بچپن سے ان کا ساتھی رہا ہے۔ طبلہ دنیا بھر میں زیادہ بِکنے والا آلہ موسیقی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں اورمیرا طبلہ اس وقت سے ساتھ ساتھ رہے ہیں جب میں چھوٹا بچہ تھا ۔ یہ میرا بہترین کھلونا ہے۔ دوست‘ محبوب ‘ بہن‘ بھائی سب کچھ رہا ہے۔ 67 سالہ استاد ذاکر حسین نے آئی اے این ایس کے سوال کے جواب میں نئی دہلی میں اخباری نمائندوں سے یہ بات کہی۔ 2002 میں پدم بھوشن ایوارڈ یافتہ استاد نے زائداز 8 برس کے وقفہ کے بعد جمعرات کی شام شری رام بھارتیہ کلا کیندر میں اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔ استاد ذاکر حسین جن پر کئی دستاویزی فلمیں (ڈاکومنٹریس) بن چکی ہیں اور کتابیں لکھی جاچکی ہیں‘ استاد اللہ رکھا کے لڑکے اور شاگرد ہیں۔ استاد ذاکر حسین ‘ تاج محل چائے کے اشتہار کی وجہ سے ملک بھر میں جانے پہنچانے جاتے ہیں۔ ان کی پیدائش ممبئی کی ہے۔ موسیقار کا اپنے طبلہ سے ہمیشہ خاص قسم کا رشتہ رہا ہے۔ انہوں نے اپنا موبائل فون نکال کر اپنے والد کی تصاویر دکھائیں اور کہاکہ میں اپنے والد کو غور سے دیکھا کرتا تھا۔ 70 برس کی عمر میں بھی اسٹیج پر آتے ہی ان کے لبوں پر تبسم دکھائی دیتا تھا۔ ٹی وی چیانلوں پر واہ تاج کا ‘ جو کمرشیل اشتہار دکھائی دیتا ہے وہ استاد کی پہچان بن گیا ہے۔

جواب چھوڑیں