امبیڈکر کے نظریات سے عوام کو واقف کروانے کی ضرورت۔ چیف منسٹر چندرا بابونائیڈو

چیف منسٹر آندھرا پردیش و صدر تلگودیشم پارٹی این چندرا بابو نائیڈو نے کہا کہ ملک میں جب تک دستور پر عمل کیا جاتا رہے گا اُس وقت تک معمار دستور بی آر امبیڈکر کو یاد کیا جائے گا ۔ آج نئی دہلی کے آندھرابھون میں منعقدہ ڈاکٹر بی آر امبیڈکر جینتی تقاریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوںنے کہا کہ امبیڈکر نے دستور میں کئی پیچیدہ مسائل کا حل فراہم کیا ۔ ملک کے عوام کے ہاتھوں میں تلوار سے زیادہ تیزاور طاقت ور ووٹ کا حق فراہم کیا ۔ چندرا بابو نائیڈو نے عوام کو بی آر امبیڈکر کا جملہ کہ وہ دوٹ کی عظیم طاقت کو استعمال کرتے ہوئے راجہ بننا چاہتے ہیں یا فروخت کرتے ہوئے غلامی کی زندگی بسر کرنا چاہتے ہیں کو یاد دلاتے ہوئے کہا کہ امبیڈکر کے نظریات کو اختیار کرتے ہوئے بااختیار مساوات پر مبنی سماج کی تشکیل ہی ان کو حقیقی خراج عقیدت ہوگی ۔ صدر تلگودیشم پارٹی نے کہا کہ چند افراد ملک کی دولت کو لوٹ کر ملک کے حالات کو خراب کررہے ہیں500 اور1000 روپے کے چلن کو ختم کرتے ہوئے 2000 روپے کے نوٹ متعارف کرنے مرکزی حکومت کے فیصلہ پر شدید تنقید کرتے ہوئے این چندرا بابو نائیڈو نے کہا کہ2000 روپے کے نوٹ کی وجہ سے سیاست پراگندہ ہوگئی ہے ۔ الیکشن کمیشن پر ایک جماعت کے ساتھ تعاون کرنے اور دوسروں کے ساتھ جانبدارنہ رویہ اختیار کرنے کا الزام لگاتے ہوئے چیف منسٹر نے کہا کہ موجودہ طور پر الیکشن کمیشن مرکزی حکومت کا آلہ کار بن گیا ہے ۔ نریندر مودی کی ہر بات پتھر کی لکیر بن گئی ہے ۔ دوسری طرف ای وی ایم مشین پر عوام کا اعتماد ختم ہوتا جارہا ہے ۔ ای وی ایم مشین کی کارکردگی ، تشفی بخش نہیں رہی ۔ صرف ریاست تلنگانہ میں فہرست رائے دہندگان سے25لاکھ نا م حذف کردئیے گئے ۔ آندھرا پردیش میں فارم7 کا غلط استعمال کیا گیا ۔ ان تمام ناکامیوں کے لئے الیکشن کمیشن عوام کے آگے جوابدہ ہے ۔ چندرا بابو نائیڈو نے ملک کے حالات پر عوام کو غور وخوص کرتے ہوئے انتخابات میں مناسب فیصلہ کرنے کی خواہش کی ۔ اس موقع پر تلگودیشم پارٹی قائدین سجنا چودھری، کے وینکٹ راؤ، جوپوڈی پربھاکر دیگر موجود تھے ۔

جواب چھوڑیں