حکومت، امراوتی، پولاورم کے تعمیری کاموں کی تحقیقات کرائے گی:وائی ایس جگن

آندھراپردیش میں کرپشن سے پاک حکومت فراہم کرنے کا وعدہ کرتے ہوئے ریاست کے نامزد چیف منسٹر وائی ایس جگن موہن ریڈی نے اتوار کو کہا کہ وہ، ریاست کے نئے صدر مقام امراوتی، پولاورم پراجکٹ کے تعمیری کاموں کے علاوہ سابق چیف منسٹر نائیڈو کی جانب سے متعارف کردہ دیگر اسکیمات میں مالی بے قاعدگیوں کی تحقیقات کرائیں گے۔ جگن، جو 30مئی کو وجئے واڑہ میں ریاست کے نئے چیف منسٹر کی حیثیت سے عہدہ و راز داری کا حلف لینے کی تیاریاں مکمل کرلی ہیں، کہا کہ ریاست کے ہر ایک محکمہ کا جائزہ لینے کے بعد اس ضمن میں قرطاس ابیض (وائٹ پیپر) جاری کریں گے۔ وائی ایس آر کانگریس پارٹی کے سربراہ نے مزید کہا کہ وہ جمعرات کو تنہاء حلف لیں گے اور اس کے 10 دن بعد وہ مکمل کابینہ تشکیل دیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پارٹی کے انتخابی وعدوں اور بڑے پیمانے پر فلاحی پروگراموں پر عمل آوری، ان کی اولین ترجیح رہے گی۔ میں نے ریاست کے عوام سے وعدے کئے ہیں ان وعدوں کو پورا کرنا میری اخلاقی ذمہ داری ہے۔ میں کوئی موقع گنوانا نہیں چاہتا۔ بھگوان یا خدا کی مہربانی و فضل سے وہ کام کریں گے اور صحیح سمت میں کام کرتے رہیں گے۔ چیف منسٹر کی حیثیت سے حلف لینے کے 50 دنوں بعد وہ عملی منصوبہ کو قطعیت دیں گے۔ نئی دہلی میں وزیر اعظم نریندر مودی سے ملاقات کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے جگن نے یہ بات کہی۔ انہوں نے کہا کہ وہ وزیر اعظم نریندر مودی اور بی جے پی کے قومی صدر امیت شاہ سے ملاقات کے لئے یہاں ہیں وہ، مودی اور شاہ سے ریاست کو خصوصی موقف اور ریاست کو مالی امداد کے بارے میں ملاقات کرچکے ہیں۔ اس وقت آندھراپردیش پر 2.58 لاکھ کروڑ کے قرض کا بھاری بوجھ ہے۔ یہ پوچھے جانے پر کہ امراوتی کی تعمیر اور ٹی ڈی پی حکومت کی جانب سے متعارف کردہ اسکیمات میں مالی بے قاعدگیوں کی تحقیقات کرائی جائیں گی؟ تو انہوں نے کہا کہ ہم ان اسکامس کا جائزہ لیں گے یہ چھوٹے اسکامس نہیں ہیں بلکہ یہ سنسنی خیز اسکامس ثابت ہوں گے۔ انہوں نے چندرابابو نائیڈو پر نئے صدر مقام کی تعمیر پر عوام کو گمراہ کرنے کا الزام عائد کیااور کہا کہ نائیڈو نے خود کم قیمت پر اراضیات خریدی ہیں۔ یہ اندرونی کہانی ہے، اندر ہی اندر بہت کچھ کاروبار ہوا ہے۔ نائیڈو نے عوام کو اراضیات فروخت کرنے پر مجبور کیا ہے۔ ریڈی نے کہا کہ وہ نائیڈو کی شخصی مخالفت نہیں کررہے ہیں۔ دریائے گوداوری پر زیر تعمیر ہمہ مقصدی پولاورم پراجکٹ کے بارے میں جگن موہن ریڈی نے کہا کہ اس پراجکٹ پر عمل آوری میں اگر کہیں کرپشن ہوا ہے تو وہ، اس پراجکٹ کی مکمل تحقیقات کرائیں گے۔ اس پراجکٹ کو وقت کے اندر مکمل کرنا ہوگا، اس کے سوا کوئی چارہ نہیں ہے۔ اس پراجکٹ کے کاموں کو جتنا جلد ہوسکے مکمل کرنا چاہئے۔ وائی ایس آر کانگریس پارٹی، کرپشن سے پاک اور شفاف حکومت فراہم کرنے کے عہد پر قائم ہے۔ ہم صرف نظام کو شفاف بنانے میں دلچسپی نہیں رکھتے بلکہ بتانا بھی چاہیں گے نظام میں کس طرح شفافیت کو برقرار رکھا جاسکتا ہے۔ جگن موہن ریڈی نے یہ بات کہی۔ انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت انقلابی اقدامات کرے گی اور ہم ملک بھر میں ایک مثالی حکومت فراہم کریں گے۔ یہ پوچھے جانے پر کہ آپ (جگن) کے خلاف 32 سے زائد مقدمات درج ہیں تو انہوں نے دعویٰ کیا کہ ان کے خلاف ٹی ڈی پی اور کانگریس کی جانب سے مقدمات دائر کرائے گئے ہیں اس کے باوجود حالیہ اسمبلی انتخابات میں ان کی پارٹی (وائی ایس آر سی پی) کو شاندار کامیابی ملی ہے۔ اس سے اس بات کا اشارہ ملتا ہے کہ ان کے خلاف درج مقدمات فرضی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میرے والد راج شیکھر ریڈی کی ہیلی کاپٹر حاڈثہ میں موت اور کانگریس سے میری لا تعلقی کے بعد میرے خلاف یہ تمام مقدمات درج کرائے گئے ہیں۔ میرے خلاف ٹی ڈی پی اور کانگریس قائدین نے ہی یہ کیسس درج کرائے ہیں۔

جواب چھوڑیں