ٹرانسپورٹ ہڑتال سے دہلی ۔ این سی آر متاثر

 دہلی اور اس کے متعلقہ نیشنل کیاپیٹل ریجن (این سی آر) علاقوں میں مرممہ موٹر وھیکل ایکٹ (ایم وی اے) کے خلاف آج جمعرات کو ٹرانسپورٹ ہڑتال منائی گئی جس کے باعث عوام بری طرح متاثر ہوئے کیونکہ ٹیکسیاں ، آٹورکشاز اور خانگی بسیں سڑکوں سے غائب تھے ۔ ہڑتال کا اعلان یونائٹیڈ فرنٹ آف ٹرانسپورٹ اسوسی ایشن (یو ایف ٹی اے) کی جانب سے کیا گیا ۔ جو دہلی اور این سی آر میں 50یونینوں کی نمائندگی کرتی ہے ۔ ایم وی اے کے ترمیم شدہ بل میں بھاری جرمانے عائد کئے گئے جس کے خلاف یہ ہڑتال منائی گئی ۔ نہ صرف دفتر جانے والوں کو اپنے کام کے مقامات پر پہنچنے میں دشواری ہوئی بلکہ والدین کو بھی آج صبح اپنے بچوں کو اسکول لیجانے میں مشکلات پیش آئیں ۔ ہڑتال کے اعلان کے پیش نظر دہلی میں چند اسکولس بند رہے ۔ کئی والدین کو اسکولوں کے انتظامیہ کی جانب سے ایس ایم ایس وصول ہوئے جس کے ذریعہ انہیں مطلع کیا گیا کہ ہڑتال کی روشنی میں اسکول بند ہیں ۔ یو ایف ٹی اے نے اس ہڑتال کے لئے بی جے پی زیر قیادت مرکزی حکومت اور اے اے پی زیر قیادت دہلی حکومت پرالزام عائد کیا ہے ۔ یو ایف ٹی اے کے جنرل سکریٹری شیام لال گورنر نے کہا کہ ہم نئے ایم وی اے ایکٹ سے متعلق ہماری مشکلات کی یکسوئی کرنے کے لئے پچھلے 15روز سے مرکزی اور ریاستی حکومت دونوں پر زور دے رہے ہیں لیکن کوئی حل سامنے نہیں آیا جس کی وجہ سے ہمیں ایک روزہ ہڑتال کرنے پر مجبور ہونا پڑا۔ دہلی کے نواحی ٹاونس جیسے نوئیڈا اور فرید آباد بھی ٹرانسپورٹ ہڑتال کے سبب متاثر ہوئے ۔ تاہم وہلی میٹرو آنے سے مسافروں کو کچھ راحت ملی ۔ اسی دوران دہلی ٹرانسپورٹ کارپوریشن (ڈی ٹی سی ) کی بسیں بھی سڑکوں پردیکھی گئیں ۔ تاکہ مسافروں کو پریشانی سے بچایا جاسکے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *