ناقص کارکردگی پر عوامی نمائندوں کو برخواست کردیا جائے گا

ریاستی وزیر بلدی نظم ونسق وشہری ترقیات کے ٹی آر نے کہا کہ بہتر کارکردگی کا مظاہر نہ کرنے والے عوامی نمائندوں کو برخواست کردیا جائے گا جس کا آغاز اپوزیشن جماعتوں سے نہیں بلکہ حکمراں جماعت ٹی آر ایس کے ارکان سے ہوگا ۔ خراب کارکردگی کے مظاہرہ پر ٹی آر ایس کے عوامی نمائندوں کے خلاف پہلے کار روائی کی جائے گی ۔ سرسلہ میں کل، زیڈ پی ٹی سیز اور ایم پی ٹی سیز کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کے ٹی آر نے کہا کہ لگائے گئے85 فیصد پودوں کی نگہداشت ضروری ہے بصورت دیگر متعلقہ سرپنچ کے خلاف کاروائی کی جائے گی ۔ پنچایت راج ایکٹ پر عمل آوری میں امتیاز نہیں برتا جائے گا ۔ اپوزیشن کے کسی بھی عوامی نمائندوں کو پنچایت راج ایکٹ سے خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے ۔ راؤ نے عہدیداروں پر زور دیا کہ وہ گرام سبھاؤں کی کارروائی کی فلم بندی کریں ۔ عوام، ہماری کارکردگی کو بہتر دیکھنا چاہتے ہیں ۔ آزادی کے70 سال بعد بھی مواضعات کی ترقی نہیں ہوئی ۔ یہ مواضعات ، ڈمپ یارڈ میں تبدیل ہوچکے ہیں ۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ، ریاست کے تمام12,571 مواضعات کی نئی صورت گری چاہتے ہیں۔30 روزہ پلے پرگتی پروگرام نے مواضعات کی شکل بدل کر رکھدی ہے ۔ حکومت، سرپنچوں کو ذمہ دارانہ رول ادا کرتے ہوئے دیکھنا چاہتی ہے ۔ سرپنچوں کو صرف عوامی مسائل حل کرنے ہوں گے ۔ انہوںنے عوامی نمائندوں پر زور دیا کہ وہ اختراعی پروگراموں میں مقامی نوجوانوں اور خاتون تنظیموں سے تعاون حاصل کریں ۔ کے ٹی راما راؤ نے مزید کہا کہ عوامی مسائل کی یکسوئی سے دور بھاگنے والے عوامی نمائندوں کو کوئی نہیں بچائے گا ایسے کام چور عوامی نمائندوں کو برخواست کردیا جائے گا ۔ انہوںنے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ ، آئندہ ماہ مارچ میں ریاست کے گرام پنچایتوں کا اچانک دورہ کرتے ہوئے ترقیاتی کاموں میں پیش رفت کا جائزہ لیں گے ۔ حکومت ، عوام کو بنیادی سہولتیں فراہم کرنا چاہتی ہے۔ عوام کو بلا خلل برقی وآبی سربراہی کو یقینی بنانا چاہتی ہے ۔ انہوںنے کہا کہ ڈمپنگ یارڈز، شمشان گھاٹوں کی تعمیر کرنا متعلقہ سرپنچوں کی ذمہ داری ہے ۔ ریاستی وزیر نے مزید کہا کہ ضلع کے تمام 255 گرام پنچایتوں میں بہت جلد ایل ای ڈی بلبس لگائے جائیں گے ۔ ضلع کے تمام اسٹریٹ لائٹس کو ایل ای ڈی بلبس سے تبدیل کرنے میں سرسلہ کو اولین مقام حاصل ہوگا۔ ہر ایک موضع میںبحیثیت مجموعی100ایل ای ڈی بلبس کی ضرورت رہے گی ۔ ایل ای ڈی بلبس کے استعمال سے برقی کی بچت ہوگی اور بلز بھی کم آئیں گے ۔ انہوںنے ضلع کلکٹر سے خواہش کی کہ وہ تجرباتی اساس پر ایل ای ڈی بلبس لگانے کا کام شروع کریں۔ ضلع کے تمام مواضعات بھی شہروں کی طرح جگمگانا چاہئے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *