سعودی گیمس میں خواتین کو مرد کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلنے کی اجازت

سعودی عرب میں آئندہ ماہ ‘سعودی گیمس کا بین الاقوامی اسپورٹس ایونٹ منعقد ہوگا، جس میں چھ ہزار سے زائد مرد و خواتین ایتھلیٹس شرکت کریں گے ۔ سعودی عرب کی حکومت نے اعلان کیا ہے کہ پہلی بار مختلف کھیلوں کی خواتین کھلاڑیوں کو مرد کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلنے کی اجازت ہوگی۔ اس نوعیت کی بڑی تقریبات سے یہ قدامت پسند عرب ملک اپنی ساکھ بہتر بنانا چاہتا ہے ۔ریاض میں 23 مارچ سے سعودی گیمس کا آغاز ہونے جا رہا ہے ۔ چالیس سے زائد کھیلوں کے مقابلے یکم مارچ تک جاری رہیں گے ۔ سعودی گیمس میں تیراکی، تیر اندازی، ایتھلیٹکس، بیاڈمنٹن، اور باسکٹ بال کے مقابلوں میں مردوں کے ساتھ ساتھ خواتین بھی حصہ لیں گی۔ کھیلوں کے امور کے سعودی وزیر شہزادہ عبدالعزیز بن ترکی نے سعودی گیمس کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ ان کے لیے سعودی مملکت کی تاریخ میں کھیلوں کے سب سے بڑے ایونٹ کا اعلان کرنا باعث فخر ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *